خ ون کی کمی دور ، ہڈیاں مضبوط ، معدے درست کرے

بینگن میں حیرت انگیز طور پر بہت ضروری وٹامن ، نمکیات اور دوسرے غذائی اجزاء پائے جاتے ہیں۔ بینگن میں وٹامن کے ، سی اور بی سکس پائےجاتے ہیں۔ اس کے علاوہ اس میں میگنیز ،  فاسفورس، کاپر، فائبرز، فولک ایسڈ ، پوٹاشیم اور میگنیشیم بھی ہیں۔ نظام انہضام:  چونکہ بینگن میں کافی مقدار میں فائبر ز ہوتےہیں۔ اس لیے نہ صرف بہت ہاضمہ کرتے ہیں۔ بلکہ معدے میں زیادہ گیس بننے سے بھی روکتے   ہیں۔ زیادہ فائبرز ہونے کی وجہ سے قبض کشاء بھی ہوتا ہے۔ بینگن غذا کو جلدی ہضم ہونے میں بھی مدد گار ہوتے ہیں۔ وزن میں کمی کےلیے : بینگن میں چونکہ نہ تو کولیسٹرول ہوتا ہے ۔ اور نہ فیٹ ۔ اس لیے ایسے لوگ جو کہ اپنا وزن کم کرنا چاہتےہیں ان کو اپنی غذا ء میں بینگن کی سبزی بھی لازمی شامل کرلینی چاہیے۔ بینگن کھانے سے ہمیں بھوک کم لگتی ہے۔ اور نتیجہ کے طور پر کم کھانے کی وجہ سے موٹاپا میں کمی واقع ہوسکتی  ہے۔

کینسر سے بچاؤ: بینگن میں اینٹی آکسیڈ ینٹس کا ایک بہترین ذریعہ ہوتے ہیں۔ اور یہی  چیز ہمیں بہت سی بیماریوں سے محفوظ رکھتی ہے۔ بینگن میں وٹامن سی بھی کافی مقدار میں ہوتے ہیں۔ جو کہ ہمارے قوت مدافعت کے نظام کا ایک اہم حصہ ہے۔ اور اس سے خ ون کے سفید ذرات کی کارکردگی بھی بہتر رہتی ہے۔ ہڈیوں کی مضبوطی کےلیے: بینگن میں آئرن اور کیلشیم کی اچھی مقدار ہوتی ہے۔ جو نہ صرف ہڈیوں کی مضبوطی بلکہ جسمانی طاقت کے لیے بھی فائدہ مند ہے۔ بینگن میں ایک خاص طرح کا جز فینولک کمپاؤنڈ  ہوتا ہے۔ جس کی وجہ سے ہی بینگن کا خاص رنگ بھی بنتا ہے۔ اور اسی کمپاؤنڈ کی ہی وجہ سے ہڈیوں کی مضبوطی بھی ہوتی ہے۔ خ ون کی کمی : ہمارے جسم میں آئرن کی کمی بہت خطرنا ک ہوسکتی ہے۔ خاص  طور پر اس کی وجہ سے خ ون کی کمی واقع ہوسکتی ہے۔ خ ون کی کمی کی علامات میں جسمانی کمزوری، تھکاوٹ ، پریشانی ، سردرد وغیرہ ہوسکتے ہیں۔

اسی لیے خ ون کی کمی کو پورا کرنے کےلیے ایسی غذائیں کھانی چاہیں  جن میں آئرن کی مقدار زیادہ ہوتی ہیں۔ بینگن میں آئرن کے علاوہ کاپر بھی موجود ہوتا ہے۔ جو کہ خ ون کے سرخ ذرات بنانے میں بہت اہم  ہے۔ خ ون کے سرخ ذرات کی وجہ سے جسم میں طاقت آتی  ہے۔ اور تھکاوٹ نہیں ہوتی۔ دماغی طاقت: بینگن فائیٹو نیو ٹرینٹس کا ایک حیرت انگیز ذریعہ ہیں۔ جو کہ دماغی طاقت کے لیے ایک بہترین چیز ہوتی ہے۔ اس نہ صرف ہمارا دماغ مختلف طرح کی بیماریوں سے محفوظ رہتاہے۔ بلکہ اس کی وجہ سے دماغ میں صیحح مقدار میں خ ون بھی پہنچ پاتا ہے۔ دماغ میں خ ون کی صیحح گردش کی وجہ سے یاد کرنے  کی اہلیت میں اضافہ ہوتاہے۔ اس کے علاوہ بھی بینگن میں ایسی بہت سے غذائی اجزاء پائے جاتے ہیں۔ جن کی وجہ سے بینگن کو “برین فوڈ” بھی کہاجاتا ہے۔ دل کے لیے مفید: بینگن نہ صرف دل کو صحت مند رکھتے ہیں

بلکہ کولیسٹرول کےلیول کو بھی کم کرتے ہیں۔ ہم ہر روز جو کچھ کھاتے ہیں۔ اس کی وجہ سے ہمارا کولیسٹرول کم یا زیادہ ہوتا رہتاہے۔ مگر بینگن کو لیسٹرول کےلیول کو کم کرنے میں مدد گار ہوتے  ہیں ۔ہارٹ اٹیک ، فالج اور دوسرے متعلقہ امراض کولیسٹرول کی ہی وجہ سے ہوتے ہیں۔ اس  کے علاوہ بینگن میں موجود” بائیو فلائیو نائیڈز” بلڈ پریشر کو بھی کم کرتے ہیں۔ اور نتیجہ کے طور پر دل کی خ ون کی نالیوں پر اچھا اثر پڑتاہے۔ شوگر میں مفید: بہت سے ڈاکٹر اور حکیم شوگر کے مریضوں کو بینگن کے استعمال کا مشورہ دیتے ہیں۔ بینگن میں ایسی خصوصیا ت پائی جاتی ہیں۔

جن کی وجہ سے ہمارا نسولین اور گلوکوز کا لیول ٹھیک رہتاہے۔ اسی وجہ سے ایسے لوگ بینگن کو مسلسل استعمال کرتےہیں۔  وہ نہ صرف شوگر کے مرض  سے محفوظ رہتے ہیں۔ بلکہ اگر کسی کو شوگر کا مرض ہوچکا ہے۔ تو اس کا لیول بھی ٹھیک ہوجاتا ہے۔ حاملہ خواتین: ایسی خواتین جو کہ حاملہ ہوتی  ہیں۔ ان کو فولک ایسڈ کی اشد ضرور ت ہوتی ہے۔ اور یہی وہ چیز ہے جو کہ بچہ کو بھی مختلف بیماریوں  سے محفوظ رکھتی ہے۔ بینگن میں بھی فو لک ایسڈ کی کافی مقدار موجود ہوتی ہے۔ اس لیے حاملہ خواتین کو اس کا استعمال کرنا چاہیے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

bullet force multiplayer unblocked shell shockers unblocked