”صرف 5 چیزیں موسم گرما میں جگر اور مثانے کی گرمی ، ہاتھ پاؤں کی جلن قبض اور پانی کی کمی چٹکی بچاتے ختم“

گرمیوں میں ہمیں بہت سے صحت کے مسائل کاسامنا کرناپڑتا ہے۔ جن میں سر فہر ست ہے جگر اور مثانے کی گرمی ۔ قبض کا ہوجانا۔

لوح کا لگ جانا ، پسینہ باربار آنا، جسم میں پانی کی کمی ہوجانا تو ان تمام مسائل کا آج آپ کو انتہائی سستا اور آسان نسخہ بتاتے ہیں۔ صرف چار دانے اور جگر اور مثانے کی گرمی ختم ۔ ہاتھوں پاؤں کاسن ہوجانا بالکل ٹھیک ہوجائے گا۔ قبض کا فوری خاتمہ ہوجائےگا۔ پورے جسم سے گرمی ختم ہوجائےگی۔ جسم میں نیا اور تازہ خ ون ہی بنے گااور اگر آپ کے جسم میں پانی کی کمی ہورہی ہے۔ اور آپ کو بہت زیادہ گرمی محسو س ہوتی ہے۔ تو ان چار دانوں کے استعمال سے آ پ کے یہ تمام مسائل انشاءاللہ فور ی ختم ہوجائیں گے ۔ یہ جادوئی نسخہ ضرور استعمال کیجیے گا۔ یہ بہت ہی میجیکل نسخہ ہے۔ اس کا کوئی سائیڈ ایفیکٹ نہیں ہے۔ اس کے استعمال کرنے سے آپ کی گرمیاں بہت خوشگوار گزریں گے ۔

جن چاردانوں کا ذکر کیا ہے وہ ہے آلو بخارا۔ اس میں وٹامن اے ، بی اور سی وافر مقدار میں پائے جاتے ہیں۔ یہ ہاتھوں کی جلن اور سن ہونے کو ختم کرتا ہے۔ یہ پیاس کی شدت اور بھوک کی کمی ، دماغی خشکی، جگر ، معدے اور مثانے کی گرمی کو ختم کرتا ہے۔ اور اس کے استعمال سے کینسر کا مرض نہیں ہوتا۔آپ نے کرنا یہ ہے کہ رات سونے سے پہلے ایک گلا س پانی لیں۔ اور اس میں چار دانے خشک آلو بخارے کے ڈال دیں۔ آپ نے ٹھنڈا یا گرم پانی نہیں لینا ہے۔ اور دوسرا اجزاء جو آپ نے لینا ہے۔ وہ ہے املی۔ املی قبض کو ختم کرتی ہے۔ دل اور معدے کو قوت دیتی ہے۔ پیٹ کی جلن ، دل کی گھبراہٹ اور جسم سے گرمی کو ختم کرتی ہے۔ آدھا چمچ پوری گودے والی املی لینی ہے۔ اور اس کو پانی کے اندر ڈال دینا ہے ۔ اور آپ کے اجزاء ہیں۔ ایک چمچ چینی۔ شوگر کے مریض بہت کم چینی استعمال کریں۔ آپ اس گلاس کو پوری رات کے لیے ڈھانپ کر رکھ دیں۔ اس کو پہلے مکس کر لیں۔ گرمی کا موسم ہوتو فریج میں رکھ دیں۔وگرنہ باہر ہی رکھ دیں۔ اور صبح آپ اچھی طرح ہاتھ یا چمچ سے مسل کر گھٹلیاں نکال کر پھینک دیں۔ املی اورخشک آلو بخارا کا گودا اس میں مکس کرلیں۔ اور گرمیوں کا یہ خاص شربت تیا ر ہے۔

آپ اس میں تھوڑی سی برف بھی ڈال لیں۔ یہ کھٹا میٹھا شربت آپ کے جسم میں خ ون کی کمی بھی پورا کرے گا ۔ اور آپ کو گرمی کا احساس بھی نہیں ہونے دے گا۔ یہ ایک گلاس شربت آپ دن میں کسی بھی وقت پی لیں۔ ہفتے میں تین مرتبہ پئیں۔ یعنی ایک دن چھوڑ کر ایک دن آپ نے پینا ہے۔ پوری موسم گرما آپ فریش اور صحتمند رہیں گے ۔ گرمیوں آپ کو باکل محسوس نہیں ہوں گی۔ اور آپ کی صحت بہت اچھی ہوجائے گی۔ خود کو آپ بہت فریش محسوس کریں گے ۔بدہضمی، معدے میں ورم یا دیگر مسائل کا سامنا سب کو ہی ہوتا ہے اور ایسا عام طور پر معدے کی گرمی کا نتیجہ ہوتا ہے، جس کی وجہ زیادہ مصالحے دار کھانے، تمباکو نوشی یا الکحل، رات گئے منہ چلانے کی عادت وغیرہ ہوسکتی ہے۔معدے کی گرمی یا اضافی درجہ حرارت زیادہ تیز نظام ہاضمہ کا نتیجہ ہوتا ہے اور اسے کنٹرول کیا جانا ضروری ہوتا ہے ورنہ صحت کے لیے پیچیدہ مسائل پیدا ہوسکتے ہیں۔ویسے تو اس مسئلے کی کوئی واضح وجہ نہیں مگر کچھ چیزیں ضرور اس کا خطرہ بڑھاسکتی ہیں جیسے مصالحے دار غذائیں،

زیادہ کھانا، رات گئے منہ چلانے کی عادت، زیادہ درد کش ادویات لینا، سست طرز زندگی اور السر وغیرہ۔اچھی بات یہ ہے کہ گھر میں بھی کچھ غذاﺅں سے اس کا علاج ممکن ہے یعنی معدے کی گرمی کو کم کیا جاسکتا ہے، تاہم اگر مسئلہ برقرار رہے تو ڈاکٹر سے رجوع کیا جانا چاہئے۔یہاں آپ ان غذاﺅں کے بارے میں جان سکیں گے جو معدے کی گرمی میں کمی لانے میں مدد دے سکتی ہیں۔دہی معدے میں صحت کے لیے فائدہ مند بیکٹریا کی مقدار بڑھانے میں مدد دینے والی غذا ہے جس سے معدے کی گرمی کے اخراج میں مدد ملتی ہے جبکہ نظام ہاضمہ اور دیگر افعال بھی بہتر ہوتے ہیں۔ٹھنڈا دودھ بھی معدے کے درجہ حرارت کو کم کرتا ہے جبکہ معدے میں تیزابیت کو بھی کم کرنے میں مددگار ہے، اس کے سکون پہنچانے والی خصوصیت معدے کی گرمی سے ہونے والی بے آرامی کو دور کرتی ہے۔ ایک گلاس ٹھنڈا دودھ پینا اس مسئلے سے نجات کے لیے فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے۔معدے میں گرمی کی ویسے تو اکثر علامات سامنے نہیں آتیں ماسوائے بے آرامی کے، ایسا ہونے پر ابلے ہوئے سفید چاول بھی معدے کو ٹھنڈک پہنچا سکتے ہیں اور پانی کی مقدار بڑھاتے ہیں، دہی کے ساتھ سادے چاول کھانا اس اثر کو زیادہ تیز کردیتا ہے۔پودینہ بھی معدے کی گرمی دور کرنے میں مدد دے سکتا ہے جس کی وجہ اس کی ٹھنڈی تاثیر ہے۔ ایک کپ پودینے کا پانی یا چائے معدے میں اضافی تیزابیت کی سطح میں بھی کمی لانے کے لیے کافی ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

beylikdüzü escort bahçeşehir escort